کاشف نصیر

درسی کتابوں سے مجھے کبھی تعلق نہ رہا، اوریہی وجہ ہے کہ امتحانات میں ہمیشہ اوسط نمبروں سے پاس ہوا، والد محترم میری خصلت سے باخوبی واقف تھے اس لئے کبھی انہوں نے مجھ پر امتحانات میں امتیاز نمبروں کے لئے دباو نہیں ڈالا۔اسکول میں جو سب سے پہلی کتاب میرے ہاتھ لگی وہ ہمدرد […]

کراچی کی تعلیم

کراچی کا تعلیمی انداز یہ ہے کہ کالج گائز تو ملتے ہیں کالج لائف نہیں۔ میٹریک کریں اور انٹر بورڈ کی کسی فرنچائز جسے عرف عام میں یہاں کالج کہا جاتا ہے رجسٹریشن کرالیں اور دو سال اور گریجویشن کرنے کی صورت میں پانچ برس مزے کریں۔ آرام سے صبح اگیارہ بارا بجے اٹھیں اور […]

اقبال ایک سچے عاشق رسول تھے جسکا اظہار نا صرف انہوں نے اپنی ملی شاعری میں کیا بلکہ غازی علم دین اور غازی  جیسے جانثار عاشقوں کی جراتمنداہ حمایت کر کے اس کا عملی ثبوت بھی دیا۔ مذہب سے انکا تعلق انتہائی قوی تھا ۔ قرآن کریم کی تلاوت روز کا معمول تھا جس کے […]

انسانی تاریخ اتنی پرانی نہیں جتنا خود انسان ہے اس لئے انسانی تہذبیب کے ارتقائ سفر کو سمجھنے کے لئے تاریخ کی کتابوں کے ساتھ ساتھ، مذہب، آثار قدیمہ قدیم انسان کے باقیات اور خود موجودہ انسان پر نظر ڈالنا بہت ضروری ہے۔ ایک بحث جو انسانی ارتقاء کے متعلق سائنسدانوں کے پائی جاتی ہے […]

گاڑی تیز چلانا بابو

مجھے شہر قائد کی صحیح وسعت کا اندازہ یا یہ کہیں کہ عملی تجربہ پہلی دفعہ اس وقت ہوا جب مجھے بے دردی کے ساتھ پورے شہر میں گھومایا گیا تھا۔ اصل میں یہ دو ہزار سات کی بات ہے کہ گریجویشن کے فورا بعد قریبی اعزاء کے مشورے پر میں نے ایک آڈٹ فرم […]

بلاگستان کے جگماتے ستارے

میں نے لکھنے کا آغاز کب کیا میں یہ ٹھیک سے نہیں بتا سکتا ہے۔ لیکن شاید نشہ پلا کے گرانا تو سب کو آتا ہے مزا تو جب ہے کہ گرتوں کو تھام لے ساقی جو بادہ کش تھے پرانے، وہ اٹھتے جاتے ہیں کہیں سے آب بقائے دوام لے ساقی! کٹی ہے رات […]

دوستی

چار سال گزر گئے، لکھنا مگر ایسا کہ

ایک سو اسی ڈگری

مجھے کبھی سازشی نظریات میں الجھنے کا شوق نہیں رہا اور میں نے ہمیشہ واقعات اور حالات کو انکے فیس ولیو پر ہی تسلیم کیا ہے، میں نے القاعدہ کی کسی کاروائی کو کبھی یہودیوں کی سازش سمجھنے یا سمجھانے کی کوشش نہیں کی، میں نے کبھی قبائلی اور نیم قبائلی علاقوں میں سرگرم مذہبی […]

بھلا کون کہ سکتا تھا کہ بحرہ عرب کے کنارے آباد بلوچ ماہی گیروں کی اس ایک چھوٹی سی بستی کی قسمت کبھی ایسے جاگے گی کہ وہ عالم اسلام کی سب سے بڑی اور دنیا کی تیسری بڑی ریاست کے دارلحکومت کا روپ ڈھال لے گی ، اسے وادی سندھ کی اقصادی شہ رگ […]

عوام کے مسائل کب حل ہونگے

کپتان کہتے تھے کہ عدالتیں آزاد ہوجائیں تو عوام کو انصاف ملے گا اور غریبوں کے مسائل حل ہوجانگے۔ اہل قلم متفق تھے کہ قلم اور زبان پر مہر نہ لگے تو شعور و اگاہی کی دنیا میں انقلاب برپا ہوجائے گا۔ قاضی اور انکی قضاء بھی آزاد ہوگئی اور ارباب فکر بھی پابند سلاسل […]

جب پیار کیا تو ڈرنا کیا

عام طور پر ہماری مقامی روایات میں دوسری شادی کو میعوب سمجھا جاتا ہے اور جو شخص یہ جرم کر بیٹھے اسکا بائیکاٹ نہ سہی تو کم از کم مشکوک نظروں سے ضرور دیکھا جاتا ہے اور اگر کوئی ادھیڑ عمر یا ضعیف شخص عقد ثانی کرلے تو اسکا مزاق اڑایا جاتا ہے، اسی طرح […]

عزت پر حملہ

امریکہ بہادر ہے نہ جی کوئی انکے سفیر کو گالی دے دے اوے ہی برا بھلا کہ دے اول فول ہی بک دے تو آپ بتائیں جی کیا سمجھا جائے گا اس بھلے بندے کو برا بھلا کہا گیا یا خود امریکہ بہادر کی عزت پر حملہ ہوگیا ؟

مایہ خانہ کی چھٹی اور اسکول میں رقص و سرور ایک کے بعد ایک،

یہ سترہ کڑور کی قوم ہے یا بدھوں کا ریورڑ،

عورت کو نبوت نہ ملنے کی واحد وجہ جو سمجھ آتی وہ یہ ہے کہ دنیا کے ہر تمدن میں مرد نے گھر سے باہر کی زمہ داریاں سنبھالی اور عورت نے گھر کے اندر کی۔ یہ سوشل ڈیزائن ایک ایسی فطرت ہے جو انسانی معاشرے کی ارتقاء اور بقاء کے لئے قدرت نے سائنسی […]

گمشدہ

بچپن میں جب باہر کھیلنے جاتا تو میری والدہ آدھ کھلے دروازے سے مجھے دیکھتی رہتی اور اگر میں کچھ لمحوں کے لئے انکی نظروں سے گم ہوجاتا تو اس وقت جب تک میں دوبارہ انکی نظروں کے سامنے نہ آجاوں بے چین نظروں سے ادھر ادھر دیکھنا شروع کردیتیں۔ مجھے یقین ہے کہ صرف […]

شکیل آفریدی

حکومت کے پاس کئی راس ایسے عالم میں جب خالد شیخ محمد پنڈی سے، ابوزبیدہ فیصل آباد سے، رمزی بن الشبیہ کراچی سے اور ابوفراج مردان سے

بیعت یزید اور غلط فہمیاں

بدقسمتی سے ایک گروہ نے مسئلہ بیعت یزید کو اپنے کھیل تماشے  کا سامان بنایا ہوا ہے اور اس کھیل تماشے میں سیدنا حسین رضی اللہ عنہ کا وہ بلند پایہ مقصد اور راسخ نظریہ کہیں کھوکر رہ گیا جس کو لے کر وہ مدینہ منورہ سے نکلے اور عراق کے صحرا میں حق پرستانہ […]

Pages