بلاگستان

تاریخ اشاعت: منگل, December 4, 2012 - 16:01


ذرّہ ذرّہ میں اسی کو جلوہ گر سمجھا تھا میںعکس کو حیرت میں آئینہ مگر سمجھا تھا میں
دید کیا، نظارہ کیا، اس کی تجلّی گاہ میںوہ بھی موجِ حسن تھی جس کو نظر سمجھا تھا میں


پھر وہی واماندگی ہے، پھر وہی بیچارگیایک موجِ بوئے گُل کو بال و پر سمجھا تھا میں
یہ تو شب کو سر بسجدہ ساکت و مدہوش تھےماہ و انجم کو...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: منگل, December 4, 2012 - 15:57

علامہ محمد اقبالؒ کی زمین میں اسد قریشی صاحب کی غزل:علامہ محمد اقبالؒ کی مشہورِ زمانہ غزل " اپنی جولاں گاہ زیر آسماں سمجھا تھا میں" کی زمین میں اسد قریشی صاحب کی خوبصورت غزل
مہرو انجم کو نشانِ لامکاں سمجھا تھا میں
”اس زمین وآسماں کو بیکراں سمجھا تھا میں“
...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: منگل, December 4, 2012 - 12:38
بسم اللہ الرحمن الرحیم
اَلْحَمْدُ لِلّٰہِ رَبِّ الْعَالَمِیْن، وَالصَّلاۃُ وَالسَّلامُ عَلَی النَّبِیِّ الْکَرِیْم وَعَلٰی آلِہِ وَاَصْحَابِہِ اَجْمَعِیْن۔

سنن ونوافلتحریر:مفتی محمد نجیب سنبھلی قاسمی صاحبحضرت ابو ہریرہ رضی اللہ عنہ روایت کرتے ہیں کہ رسول اللہ ﷺ نے ارشاد فرمایا: اللہ  تعالیٰ...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: منگل, December 4, 2012 - 01:42
القلم تاج نستعلیق (اولین اوپن سورس ترسیمہ جاتی اردو فونٹ) کا اجراء 9/نومبر/2012 کو عمل میں آیا تھا۔
القلم تاج نستعلیق ، دراصل بر صغیر پاک و ہند کے عظیم خطاط استاد تاج الدین زرین رقم کی خطاطی کی بنیاد پر استوار کیا گیا ایک لگیچر بیسڈ فانٹ ہے ۔ اس سے قبل گوکہ نوری نستعلیق کے ترسیمے موجود تھے لیکن وہ تجارتی بنیادوں پر استعمال ہو رہے تھے اور انہیں مفت استعمال کرنا قانونی اور اخلاقی طور پر درست نہ تھا۔ مزید یہ کہ لاہوری انداز کے نستعلیق کی ضرورت کو شدت سے محسوس کیا جا رہا تھا۔ اسی ضرورت کے پیش نظر القلم فورم کی انتظامیہ نے آج سے تین سال پہلے اس بات کا فیصلہ کیا کہ اردو کمیونٹی کے لیے ایک ایسا...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: سوموار, December 3, 2012 - 20:28

بلاگر کے لیے خوبصورت اردو سانچہ
قارئین !آج ہم بلاگر کے لیے ایک خوبصورت سانچہ پیش کر رہے ہیں امید ہے کہ پسند کیا جائیگا۔یہ سانچہ بلاگر کی سادہ تھیم کی مدد سے بنایا گیا ہے۔ جو احباب اس سانچہ کو استعمال کرنا چاہتے ہیں وہ اس بات کو ملحوظ رکھیں کہ سانچہ اپلوڈ کرنے کے بعد وجٹ اکثر بے ترتیب ہو جاتے ہیں لھٰذا  اگرآپ کے بلوگ کے ساتھ ایسی کوئی صورت پیش آئے تو وجٹ از سر نو ترتیب دیں۔...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: اتوار, December 2, 2012 - 15:41
مصنف: ابو شامل

1260ء کے موسم بہار میں جب قاہرہ کے شہری روزمرہ کی زندگی میں مصروف تھے تو مملوک سلطان مظفر سیف الدین قطز کو اک ایسے خطرے کا سامنا تھا، جس سے اس وقت کے حاکم تھر تھر کانپتے تھے، منگول!!

مملوک سلطان اور اس کے جرنیلوں کے سامنے منگول حکمران ہلاکو خان کے چار ایلچی کھڑے تھے۔ انہوں نے قطز کو ایک خط دیا، جس میں سفارتی آداب کی قطعاً کوئی پروا نہ کی گئی تھی اور یہ اس لہجے میں نہیں لکھا گیا تھا جو کسی سلطنت کا حاکم اپنے کسی ہم منصب کو بھیجتا تھا:

مشرق و مغرب کے بادشاہوں کے بادشاہ خانِ خانان کی طرف سے قطز مملوکی کے لیے، جو ہماری تلواروں کی دستبرد سے بچ نکلا۔

تمہیں سوچنا...

زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: اتوار, December 2, 2012 - 14:51

آج حالات بدلے ، وقت بدلا تو کدو کی کھیر ، خوبانی کا میٹھا ، فروٹ کا میٹھا اور دیگر میٹھے دسترخوان پر چھا گئے ہیں۔
لیکن ہمیں ڈبل کے میٹھے کی ناقدری پر بڑا افسوس ہوتا ہے چنانچہ ہمیں آج بھی وہ اتنا ہی عزیز ہے جتنا کل تھا۔ ہماری آنتیں آج بھی زعفرانی رنگ کا ڈبل کا میٹھا کھا کر زعفران زار ہو جاتی ہیں۔ چنانچہ حال...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: سنیچر, December 1, 2012 - 22:03
مصنف: جعفر

رمضان سے پہلے اور عید کے بعد دھڑادھڑ شادیوں کا موسم ہوتا ہے اور ایسے ایسے بندے کی شادی ہوجاتی ہے کہ رب دیاں رب ای جانے، کہنے کو دل کرتا ہے۔ ایسے ہی سردیوں کے بعد امتحانات کاموسم شروع ہوجاتا ہے جس میں سکولوں، کالجوں کے بچے اور بچیاں، اپنے اپنے سماجی رتبے کے مطابق پرچے، امتحان اور ایگزیمز وغیرہ دیتے ہیں ۔ گرمیوں میں لوڈ شیڈنگ، پِت اور  آموں کا موسم ہوتاہے ۔اکتوبر، نومبر اجتماعی زچگیوں کا موسم ہوتاہے جو اگرچہ سارا سال ہی جاری رہتا ہے لیکن ان دو مہینوں کی فضیلت کچھ سِوا ہے۔ ان سارے موسموں کے بعد دسمبر آجاتا ہے۔ اور جناب عالی، یہ اجتماعی رنڈی رونے کا موسم ہے۔ جن کی جون میں سپلیاں...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: سنیچر, December 1, 2012 - 17:42
مصنف: کوثر بیگ
 








السلام علیکم

پیاری بہنوں اور محترم بھائیوں:۔...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: سنیچر, December 1, 2012 - 17:20
مصنف: اس طرف سے
Mirat-ul-Uroos jadeed -khulasa
اصغری اور اکبری جس زمانے میں پیدا ہوئیں اس زمانے میں تو لڑکوں کے نام بھی اصغر اور اکبر نہیں رکھے جاتے تھے  لہذا انکے نام نکی Niki اور ایلدی Eldy رکھے گئے۔ ماں باپ چونکہ تازے تازے پیسے والے ہوئے تھے لہذا روشن خیال تھے کیونکہ یہ کہانی برصغیر کے زمانے کی نہیں بلکہ آج کل کے پاکستان کی ہے اور آج کل کے پاکستان میں امارت آتی ہے تو روشن خیالی خود بخود اس گھر میں گھس جاتی ہے۔انہوں نے فیصلہ کیا کہ اپنی بچیوں کو لڑکوں کی طرح پالیں گے-
 ...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: سنیچر, December 1, 2012 - 12:04
There is always A little truth behind every “just kidding” A little knowledge behind every “I don’t know” A little emotion behind every “I don’t care” And A little pain behind every “it’s okay“ Filed under: Food for Thought, Uncategorized … پڑھنا جاری رکھیں→
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: جمعہ, November 30, 2012 - 18:59

ایک زمین۔۔۔دو شاعر (علامہ اقبالؒ، عبد الحئ عارفی)۔۔۔دو غزلیں

علامہ اقبالؒ کی غزل:اپنی جولاں گاہ زیر آسماں سمجھا تھا میںآب و گل کے کھیل کو اپنا جہاں سمجھا تھا میں
بے حجابی سے تری ٹوٹا نگاہوں کا طلسماک ردائے نیلگوں کو آسماں سمجھا تھا میں


کارواں تھک کر فضا کے پیچ و خم میں رہ گیامہر و ماہ و مشتری کو ہم عناں سمجھا تھا میں
...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: جمعہ, November 30, 2012 - 09:18

Read Online


[7 M]


By  ShaykhAbu Ammar Zahid Ar-Rashidi


Download

زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: جمعرات, November 29, 2012 - 18:43

تیرہواں کھمبامنشا یاد /  محمد ابراہیم جمالی
پاکستان میں بولی جانے والی تقریباً تمام ہی زبانیں ادبی سرمائے سے مالا مال رہیں ہیں۔ ان زبانوں میں بلا شبہ بہترین ادب تخلیق ہوتا  رہا ہے اور اب بھی ہو رہا ہے۔ پنجابی ادب کا دامن بھی ایسی تحریروں سے خالی نہیں ہے۔ اسی ادب سے منتخب کردہ ایک شہ پارہ۔
محبت کبھی نہیں مرتی کی جیتی جاگتی عملی تصویر
گاڑی نے وسل دے کر سبز جھنڈی لہرا دی۔ ریل کار روانہ ہونے والی تھی۔ عین آخری لمحات میں ایک نو بیاہتا جوڑا اس کے سامنے والی سیٹوں پر آکر بیٹھ گیا۔ اچانک اسے محسوس ہوا جیسے وہ ریل کی نرم اور آرام دہ سیٹ پر نہیں بیٹھا بلکہ ریل کی...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: جمعرات, November 29, 2012 - 16:32
مصنف: غلام عباس

سانپ اور چنڈولعنوان کی یہ سطر “خلیل جبران” کے افسانے”The Scholar and the Poet” سے...

زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: بدھ, November 28, 2012 - 15:28

دو شاعر۔۔۔احمد فراز اور محسن نقوی۔۔۔ایک زمین۔۔۔دو غزلیں
محسن نقوی کی غزل:
سایۂ  گُل سے بہر طَور جُدا ہو جانا
راس آیا نہ مجھے موجِ صبا ہو جانا
اپنا ہی جسم مجھے تیشۂ فرہاد لگا
میں نے چاہا تھا پہاڑوں کی صدا ہو جانا


موسمِ گُل کے تقاضوں سے بغاوت ٹھہرا
قفسِ غنچہ سے خوشبو کا رِہا ہو...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: بدھ, November 28, 2012 - 12:16
مصنف: کاشف نصیر
دنیا بھر میں وقت کے ساتھ ساتھ سفری سہولیات مزید آسان، سستی اور تیزتر ہوتی جارہی ہیں لیکن شاید پاکستان وہ واحد ملک ہے جہاں ہر شعبے کی طرح اس شعبے میں بھی ترقی کے ...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: بدھ, November 28, 2012 - 11:43
مصنف: عرفانیات


نوٹ: فل سکرین کر کے زیادہ مشاہدہ کریں۔
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: بدھ, November 28, 2012 - 10:03
مصنف: محمد وارث
شامِ غم کی سحر نہیں ہوتی
یا ہمیں کوخبر نہیں ہوتی

ہم نے سب دُکھ جہاں کے دیکھے ہیں
بے کلی اِس قدر نہیں ہوتی

نالہ یوں نا رسا نہیں رہتا
آہ یوں بے اثر نہیں ہوتی

چاند ہے، کہکشاں ہے، تارے ہیں
کوئی شے نامہ بر نہیں ہوتی

ایک جاں سوز و نامراد خلش
اِس طرف ہے اُدھر نہیں ہوتی

دوستو، عشق ہے خطا لیکن
کیا خطا درگزر نہیں ہوتی؟

رات آ کر گزر بھی جاتی ہے
اک ہماری سحر نہیں ہوتی
...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: بدھ, November 28, 2012 - 03:00
مصنف: وسیم بیگ

میرے محدود علم کے مطابق

گدھے دیکھنے میں جتنے شریف اور نفیس نظر آتے ہیں حقیقت میں بھی اتنے ہی شریف اور مسکین ہوتے
ہیں میری بات کا یقین نہ ہو تو ذرا اٹھ کر آئینہ دیکھ لیں یا پھر کسی گدھے کے پیچھے سے گزر کر دیکھیں وہ دو لتی جھاڑ میری بات کی سچائی پر اپنی مہر لگا دے گا
پہلے زمانوں میں گدھے مال برداری کے کام آتے تھے ویسے آج کل بھی زیادہ تر گدھے یہ ہی کام کرتے ہیں بس کچھ گدھے انسانی روپ دھار کر انسانی صفوں...

زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: بدھ, November 28, 2012 - 01:14
ہمارے بلاگ کے ایک قاری نے دریافت کیا ہے کہ بلاگر ڈاٹ کام پر قائم بلاگ کے جملہ مراسلات اور جملہ تبصروں کی تعداد کس طرح معلوم کی جا سکتی ہے؟
یعنی کہ کچھ اس طرح :

بلاگ اسپاٹ ڈاٹ کام یعنی بلاگر ڈاٹ کام کے بلاگز پر یہ چیز json کی ایک چھوٹی سی اسکرپٹ کے ذریعے حاصل کی جا سکتی ہے۔
اپنے بلاگ کے...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: منگل, November 27, 2012 - 21:32
مصنف: شعیب صفدر

دہشت گردی کا خطرہ  ہے! دہشت زدہ کون ہے؟ حکومت  چلانے والوں کو حکمرانی تب ہی زیب دیتی ہے جب وہ بے خوف ہو۔ ا...

زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: منگل, November 27, 2012 - 21:31
مصنف: شعیب صفدر
کہتے ہیں اللہ والوں کا دل بہت نرم ہوتا ہے۔ جب کبھی اللہ کے رحم و پیار کا ذکر محفل میں ہوتا ہے تو اللہ والے اپنی رب کی محبت میں اشک بارہو جاتے ہیں۔ یہ ہی معاملہ اِن کا اللہ کے محبوب نبی اور اُن کے نیک بندوں کے ذکرکے وقت ہوتا ہے۔
مجھے ہمیشہ اپنی اِس حالت پر خود پرغصہ آیا کہ مجھ پر یہ کیفیت کیوں طاری نہیں ہوتی، مجھے اللہ والوں جیسا کردار و دل کیوں نہیں حاصل۔ اس کا سب سے پہلے احساس مجھے تب ہوا جب میں مکہ میں کعبہ کے دروازہ کے قریب کھڑا دعا مانگ رہا تھا اور میرے آس پاس کھڑے تمام افراد ہی کعبہ سے لپٹ کر رورو کر دعا مانگ رہے تھے اور میں جہاں اُن پر رشک کر رہا تھا وہاں ہی خود پر غصہ آ رہا تھا...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: سوموار, November 26, 2012 - 19:51

Read Online


Volume1  Volume2


By Shaykh Mufti Saood...

زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: سوموار, November 26, 2012 - 10:21
مصنف: علی عامر

میں جب بھی عشق و محبت کی وارفتگی کے مناظر دیکھتا ہوں۔ ہمیشہ اس سوچ میں ڈوب جاتا ہوں کہ یہ سب کچھ، جو بدن کی لرزش میں دکھائی دیتا ہے، جو عقیدت کا نورانی ہالہ بن کر ہمارے وجود کا احاطہ کر لیتا ہے، جو درد میں ڈھل کر جوئے خوں کی طرح ہماری آنکھوں سے ٹپکتا ہے، جو سوز و گداز کا دل دوز آہنگ لئے ہمارے وعظوں، خطبوں، نعتوں، نوحوں اور مرثیوں میں رچ بس جاتا ہے اور جو ہمیں کچھ دیر کے لئے دنیا و مافیہا سے بے گانہ کر دیتا ہے، وہ ہمارے کردار و عمل کا حصہ کیوں نہیں بن پاتا؟

مجھے جب بھی حج و عمرہ کی سعادت نصیب ہوئی، اس سوال کی چبھن تیز تر ہوگئی۔ مکہ و مدینہ کے حرمین میں ایسے ایسے مناظر دیکھنے کو ملتے...

زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: سوموار, November 26, 2012 - 01:16
میں ہسپتال کے پرائیویٹ روم میں کرسی پہ پیٹھ کر ہیٹر کی جالی کے ڈنڈے گن رہا تھا کہ فون کی گھنٹی بجی اور میں شمار بھول گیا ، فون کرنے والے کو دو تین گالیاں دینے کے بعد میں نے فون اٹھایا اور نہایت اخلاق سے اسلام علیکم کہا ، آگے سے جو آواز آئی تو گویا کان کے پردے پھٹنے لگے  فون کو کان سے دور کیا ، سوچا کہ اتنی اونچی آواز سے بولنا تھا تو فون کرنے کی کیا ضرورت تھی براہ راست  بھی آواز پہنچ ہی رہی تھی ،بلاامتیازhttp://www.blogger.com/profile/01265011304348792367noreply@blogger.com36
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: اتوار, November 25, 2012 - 21:46

امتیاز نے مجھے کہا تھا کہ جعفر حسین سے مل لے۔۔۔ تجھے ایک اچھا دوست مل جائے گا۔۔۔۔

فجیرہ قریب ہی تھا۔۔۔ جعفر حسین کو فون کیا تو کوئی جواب نہیں ملا، ایک بار پھر فون کیا۔۔۔ اور اب کی بار بھی جعفر حسین نے فون نہیں اٹھایا۔۔۔ میں نے سوچا۔۔۔ چلو فجیرہ پہنچ کردوبارہ کوشش کروں گا۔۔۔ کچھ دیر بار جعفر حسین کا فون آ ہی گیا۔۔۔ سلام دعا کے بعد جعفر حسین نے بتایا کہ وہ مسجد میں تھا اس لیے فون نا اٹھا سکا۔۔۔ خیر اس نے راستہ سمجھایا، جہاں مجھے انہیں ملنا تھا۔۔۔

...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: اتوار, November 25, 2012 - 15:18
مصنف: کاشف نصیر
سیدنا عثمان رضی اللہ تعالی عنہ کے دور مبارک تک امت مسلمہ کے درمیان کسی مسئلے پر اختلاف کی نظیر نہیں ملتی لیکن امام المظلومین سیدنا عثمان غنی رضی اللہ تعالی عنہ کی شرافت ، ...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: اتوار, November 25, 2012 - 15:10
مصنف: ابو شامل

تسوید و ترجمہ: عبدالخالق بٹ

یورپ میں عہد ِنشاۃ ثانیہ(14ویں تا17ویں صدی) کامیابی اور سرفرازی کے نئے امکانات کے ساتھ طلوع ہوا۔ اس عہد میں تعمیرات، سائنس، فلسفہ، ادب، مصوری، موسیقی، رقص اور فنِ حرب سمیت ہر شعبۂ زندگی میں بیداری کی لہر پیدا ہوئی اور جب یورپ نے خود کو جہانبانی کا اہل ثابت کردکھایا تو انہیں ’’شانِ کئی‘‘ بھی ملی اور’’ دنیانئی ‘‘بھی ملی، اور یہ عین قانونِ فطرت تھا، بقول شاعر:

کوئی قابل ہو تو ہم شانِ کئی دیتے ہیں

ڈھونڈنے والوں کو دنیا بھی نئی دیتے ہیں


ابھی نئی دنیا(امریکا) کی دریافت کا غلغلہ نہیں تھا کہ یورپی جہاز راں مشرقِ بعید میں انجانے ساحلوں...

زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: سنیچر, November 24, 2012 - 20:41

Read Online


[4 M]


By Shaykh Muhammad Najeeb Sambhali Qasmi (DB)


Download

زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: سنیچر, November 24, 2012 - 12:50

فلیش ڈرائیو کو بطور رام ( Ram  )استعمال کریں
ونڈوز سیون کی ایسی بہت ساری خصوصیات ہے جو عام صارفین نہیں جانتے ۔ جب بھی ونڈوز سے ہم  USB Storage  Drive منسلک کرتے ہیں Auto-play Pop Up   ہوتا ہے کیا آپ نے کبھی اس پر غور کیا ہے کہ اس میں کون کون سے متبادل نظر آتے ہیں۔آج ہم ان ہی متبادل میں سے ایک کے ذریعے آپ کے سسٹم کی رفتار بڑھانے کا طریقہ بتانے جا رہے ہیں۔ ہو سکتا ہے کافی احباب اس طریقے کو جانتے ہوں لیکن جو ہماری طرح طفل مکتب ہیں ان کے لیے یہ بہت ہی کارگر نسخہ ثابت ہ سکتا ہے۔  ہم درج ذیل تصویر میں آپ کو  ظاہر ہونے والا  Pop Up...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: جمعہ, November 23, 2012 - 12:58
شادی کی تقریب کے بعد وداع ہوتے ہوئے دلہن نے اپنے والد کی پیشانی کا بوسہ لیا اور ان کے ہاتھ میں کوئی چیز تھما دی۔
تقریب میں موجود تمام حاضرین حیران تھے کہ آخر دلہن نے وہ کون سی چیز اپنے والد کو دی ہے؟
والد نے تقریب میں موجود شرکاء کے تجسس کو ایسے محسوس کیا جیسے تمام لوگوں کی نظریں اس پر گڑی ہیں کہ وہ کب اس راز کو آشکار کرتا ہے؟
بالآخر اس نے بلند آواز میں اعلان کیا :
"خواتین و حضرات! آج میری زندگی کا خوش نصیب ترین دن ہے ۔۔۔"
پھر اس نے ہاتھ اٹھا کر وہ چیز بتائی جو اس کی دختر نیک اختر نے اسے تھمائی تھی ۔۔۔
"میری عزیز از جان بیٹی نے آخر کار ۔۔۔ آخر کار میرا کریڈٹ کارڈ...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: جمعہ, November 23, 2012 - 10:38
مصنف: محمد وارث
لباس ہے پھٹا ہوا، غُبار میں اٹا ہوا
تمام جسمِ نازنیں، چھدا ہوا کٹا ہوا
یہ کون ذی وقار ہے، بلا کا شہ سوار ہے
کہ ہے ہزاروں قاتلوں کے سامنے ڈٹا ہوا
یہ بالیقیں حُسین ہے، نبی کا نُورِ عین ہے

یہ کون حق پرست ہے، مئے رضائے مست ہے
کہ جس کے سامنے کوئی بلند ہے نہ پست ہے
اُدھر ہزار گھات ہے، مگر عجیب بات ہے
کہ ایک سے ہزار کا بھی حوصلہ شکست ہے
یہ بالیقیں حُسین ہے، نبی کا نُورِ عین ہے

یہ جسکی ایک ضرب سے، کمالِ فنّ ِ حرب سے
کئی شقی گرئے ہوئے تڑپ رہے ہیں کرب سے
غضب ہے تیغِ دوسرا کہ ایک ایک وار پر
اُٹھی صدائے الاماں زبانِ شرق وغرب سے...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: جمعرات, November 22, 2012 - 23:28
مصنف: علی عامر

زندگی کومیدان کربلا سمجھنے والے بابا فرید شکر گنج  … ڈاکٹر منظوراعجاز

بابا فرید شکر گنج  کے سالانہ عرس کے محرم کے اوائل میں ہونے سے کچھ عجیب سا لگتا تھالیکن پھر جب ان کی زندگی کو تھوڑا گہرائی سے دیکھا تو پتہ چلا کہ ایک ایسا مردقلندر جس نے زندگی کو کربلا کا میدان سمجھ کر جیا ہو اس کا عرس عاشورے کے دنوں میں نہیں ہوگا تو کب ہوگا۔ انہی کا مصرع ”چنت کٹھولا وان دکھ برہ وچھاون لیف “ ( چنتا یاپریشانی میری چارپائی ہے جسے دکھوں کے بان سے بنا گیا ہے اور مسلسل درد ہجر میرا توشک (گدا)ہے“۔لاکھوں عقیدت مند عرس کے موقع پرجان کی بازی لگا کر بہشتی دروازے سے گزریں گے لیکن یہ بات بہت کم لوگوں...

زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: جمعرات, November 22, 2012 - 23:18
مصنف: جعفر

فیصل آباد کی مشہور چیزوں میں آٹھ بازار بھی شامل ہیں۔ ان میں سے ایک جھنگ بازار بھی ہے جس میں ہمارا آبائی گھر تھا۔ جہاں ہم اس دنیائے فانی کو رونق بخشنے کے لیے تشریف لائے تھے۔  بچپن کی ایک بہت ہی مدہم سی یاد کچھ یوں ہے کہ ہمارا گھر جو کہ دوسری منزل پر تھا کہ نچلی منزل دکانوں پر مشتمل تھی، اس میں کافی ساری اجنبی خواتین اور بچے بھرے ہوئے ہیں اور وہ بازار سے گزرتے ہوئے ایک ہجوم کو دیکھ رہے ہیں جن میں کچھ مسجدوں کے ماڈل اور ایسی ہی کچھ اورچیزیں بھی شامل ہیں۔  اور ان میں شامل لوگ کچھ نعرے وغیرہ بھی لگارہے ہیں اور کچھ عجیب سی دھمک نما آوازیں بھی آرہی ہیں۔ ہماری دادی سب گھروالوں...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: جمعرات, November 22, 2012 - 22:14
المانیہ او المانیہ۔ ۔جرمنی کی سیر
ِ المانیہ او المانیہ۔ سیرِ برلن
قسط نمبر (۳)
ہماری بس چیک پوائینٹ چارلی پہنچی تو مغربی جرمنی کی سرحد پر متعین گارڈز نے ہمارے پاسپورٹ کا جائزہ لیا اور ہمیں آگے بڑھنے کا اشارہ کردیا۔ بس رینگتی ہوئی آگے بڑھی اور نو مینز لینڈ سے ہوتی ہوئی مشرقی جرمنی کی سرحد پر پہنچ گئی۔ دیوارِ برلن کو دیکھ کر جو ہیبت ہم پر طاری ہوگئی تھی وہ اور زیادہ گہری ہوگئی۔ مشرقی جرمن فوجیوں نے انتہائی سرعت کے ساتھ بس کو گھیرے میں لے لیا اور اس کی جامع تلاشی شروع کردی۔ تمام مسافروں کے پاسپورٹ چیک کرکے اپنے قبضے میں کرلیے گئے اور بس کی نچلی منزل پر واقع سامان کے کمپارٹمنٹ کو...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: جمعرات, November 22, 2012 - 18:55
مصنف: محمد سلیم
ڈنمارک کی کوپن ہیگن یونیورسٹی نے ایک بار فزکس کے پرچے میں طلباء سے یہ سوال پوچھا کہ: بیرومیٹر کی مدد سے کسی فلک بوس عمارت کی اونچائی کی پیمائش کس طرح کی جا سکتی ہے؟ اس آسان سے سوال کا اتنا سا جواب بنتا ہے کہ؛ بیرومیٹر سے زمین کی سطح پر ہوا کا [...]
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: جمعرات, November 22, 2012 - 17:45

Read Online


  


[15 M]


By  Hazrat Maulana Muhammad Ilyas Ghuman (DB)


Download

...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: جمعرات, November 22, 2012 - 17:29
مصنف: اس طرف سے
Mobile ke poshida fawaid
جسے دیکھو ہمارے ہاں منہ اٹھا کر موبائل کی مخالفت میں بات کرنے لگتا ہے۔ویسےتو سب کے پاس تین تین سمیں Sims ہیں پر جو بولیں گے موبائل کے خلاف۔ ہاتھ میں آئی فون I phone ہو گا جے فون J phone ہو گا اور سنیں تو کہہ رہے ہوں گے کہ یار میں بڑا تنگ ہوں اس موبائل سے ، جان کو آگیا ہے یہ تو۔ بھائی اتنا ہی تنگ ہو تو پھینک دو اور ہمیں بتا دو کہاں پھینک رہے ہو آپکی تو جان چھوٹے ، یا خود ہی ہمیں دے دو ہم آپکی خاطر قربانی دے دیں گے ۔لیکن نہیں ۔

تو آج میں آپکو موبائل کی ایسی خوبیوں کے بارے بتائوں گا جو ہمارے معاشرے میں موبائل کی مہربانی سے رچ بس گئی ہیں اور ان پر کسی...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: جمعرات, November 22, 2012 - 14:22
بسم الله الرحمن الرحیم
در میان صدای بلند گریه و ضجه، طبل و دهل، سینه زنی و مداحی
بیا لحظه ای فارغ از هیاهو گوش فرا دهیم به صدایی که حق شنیدش ادا نمی شود، صدای زیبایی است اما غریب، شاید گوش منو تو با آن آشنا نیست، فریادی است که صدایمان می کند، به سوی خود می خواندمان، گوش کن، خوب گوش کن، آری هیاهو و سر و صدا نمی گذارد بشنویمش، ولی باید شنیدش.....خوب گوش کن، چیزهایی شنیده می شود، مفهوم نیست، هیاهو مجال فهم نمی دهد، ولی باید شنید، آن صدای غریب را، که فراموشش کرده ایم،هنوز واضح نیست بیا تو هم با من، همه با هم لحظه ای سکوت کنیم و گوش فرادهیم به صدای غریبانه دوست، به امتداد هل من...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: جمعرات, November 22, 2012 - 08:49
مصنف: یاز غل
عزا میں بہتے تھے آنسو یہاں، لہو تو نہیں
یہ کوئی اور جگہ ھو گی، لکھنؤ تو نہیں

یہاں تو چلتی ہیں چھریاں زبان سے پہلے
یہ میر انیس کی، آتش کی گفتگو تو نہیں

تم اس کا رکھ لو کوئی اور نام موزوں سا
کیا ھے خون سے جو تم نے، وضو تو نہیں

ٹپک رہا ھےجو زخموں سےدونوں فرقوں کے
بغور دیکھو ، کہیں یہ اسلام کا لہو تو نہیں

سمجھ کےمال میرا جس کو تم نےلوٹا ھے
پڑوسیو! کہیں یہ تمہاری ہی آبرو تو نہیں
درج بالا اشعار کیفی اعظمی نے لکھنؤ میں شیعہ سنی فسادات کے موقع پہ کہے تھے۔ افسوس ناک بات یہ کہ ہمارے ملک میں آج بھی حالات ویسے کے ویسے ہی ہیں۔
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: بدھ, November 21, 2012 - 17:24
یار آج تو میں غالب کے تمام خطوط اور اشعار کو ازبر کر کے آیا ہوں ... ان شاءاللہ آج کا پرچہ تو بہت ہی بہترین ہو گا اور میرے نمبر بھی اچھے ہی آئینگے .... یہ بات آج کا پیپر شروع ہونے سے پہلے اپنے دوستو سے کی .. تو ایک دوست نے پہلے تو حیرت سے دیکھا اور پھر ہنستا ہی چلا گیا .. کافی دیر بعد جب اسکے حواس بحال ہوئے تو اس سے ہسنے کی وجہ پوچھی .... کہنے لگا ابے احمقوں کے سردار آج اردو کا نہیں حساب کر پرچہ ہے... اور تو اردو کی تیاری کر کے آگیا ... ابے صفر بھی نہیں ملے گا تجھکو ... چاہے غالب کیا دنیا کے ہر اردو شاعر کے بارے تو مفصل لکھ دے ........

ایک اور مثال بلکل آسان اور سیدھی سی صرف یاد...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: بدھ, November 21, 2012 - 07:58

Read Online


[3 M]


By  Mufti Abdur Rauf Sakharvi (DB)


Download

زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: منگل, November 20, 2012 - 19:36
First published on 20th November 2012  دراصل عزت ماب صدرِ پاکستان جناب آصف علی زرداری کے دورہ و خطاب خیبر پختونخواہ سے متعلق ہے۔ پوسٹ کے عنوان کی وضاحت کرتا چلوں یہ ایک پنجابی محاورہ ہے جسے عرفِ عام میں کسی کو … پڑھنا جاری رکھیں→
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: منگل, November 20, 2012 - 17:40
مصنف: علی عامر

آپ انٹرنیٹ کے ذریعے گھر بیٹھے روزگار بھی کما سکتے ہیں۔

ایک ایسے دور میں جب مہنگائی عروج پر ہو بیروزگاری عام ہوتی جائے تو ایسے دور میں انٹرنیٹ آپ کے لیے بہترین ذریعہ روزگار ثابت ہو سکتا ہے۔ یا وہ تمام افراد جو اپنی ماہانہ آمدنی میں اضافے کے لیے پارٹ ٹائم جاب کی تلاش میں ہیں ۔ وہ خواتین جو گھر کے کاموں سے فارٖغ ہونے کے بعد گھر بیٹھے کوئی کام کرنا چاہتی ہیں، جو ان کے لیے حصول آمدن کا باعث ہو اور گھر کا بجٹ بہتر طور پر چلایا جا سکے۔ وہ تمام طلبہ و طالبات جو پڑھائی کے ساتھ ساتھ کچھ کام کرکے اپنا جیب خرچ نکالنا چاہتے ہیں۔ ایسے تمام افراد کے لیے انٹرنیٹ بہترین ذریعہ روزگار...

زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: منگل, November 20, 2012 - 10:27

Read Online



[4 M]


By Hazrat Maulana Hakim Akhtar Saheb(DB)


Download

زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: منگل, November 20, 2012 - 09:48
مصنف: محمد وارث
قرنِ اوّل کی روایت کا نگہدار حُسین
بس کہ تھا لختِ دلِ حیدرِ کرّار حُسین

عرصۂ شام میں سی پارۂ قرآنِ حکیم
وادیٔ نجد میں اسلام کی للکار حُسین

سر کٹانے چلا منشائے خداوند کے تحت
اپنے نانا کی شفاعت کا خریدار حُسین

کوئی انساں کسی انساں کا پرستار نہ ہو
اس جہاں تاب حقیقت کا علمدار حُسین

ابوسفیان کے پوتے کی جہانبانی میں
عزّتِ خواجۂ گیہاں کا نگہدار حُسین

کرۂ ارض پہ اسلام کی رحمت کا ظہور
عشق کی راہ میں تاریخ کا معمار حُسین
...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: سوموار, November 19, 2012 - 20:50


بہت دنوں پہلے کہیں پڑھا تھا کہ کچھ ویب سائٹس ایسی ہوتی ہے جو ازخود براوزر میں اپنے فونٹ شامل کرتی ہے اس کے فونٹس آپ کے کمپیوٹر میں ہونا ضروری نہیں ۔ چونکہ وہ میرا بلاگنگ کا شروعاتی دور تھا اور تب مجھےبلاگنگ کی الف ، ب ، بھی ٹھیک سے نہیں پتا تھی اس لیے اس تحریر سے سرسری گذر گیا تھا ۔آج اچانک دل میں  یہ خیال اردو فونٹس کے تعلق سے آیا کہ اردو فونٹس بھی اس طرح براؤزر میں ازخود انسٹال ہوتو کتنا اچھا ہوگا۔ دن بھر گوگل کے کان مروڑتا رہا   نہ جانے کتنی ویب سائٹس اور گروپس کی خاک چھانی ۔ فونٹ فیس کے متعلق  گوگل گروپس میں پڑھنے کے بعد کچھ امید نظر آئی۔لیکن مسئلہ اردو...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: سوموار, November 19, 2012 - 14:52
مصنف: حجاب شب

صنفِ نازک کی تعریف اور حُسن کے قصیدے شعراء تمام عمر لکھتے رہتے ہیں مطمئن نہیں ہوتے ۔۔۔۔ اخبارات میں عورتوں کے مظلومیت کی داستان ہو یا عالمی دن ہر کوئی چاہتا ہے کہ وہ کچھ ایسا لکھے کہ بازی لے جائے ۔۔۔۔ لیکن مرد کے لیئے اس وقت لکھا جاتا ہے جب اس نے عورت پہ ظلم کیا ہو ۔۔۔ کبھی کوئی مردوں سے ان پہ ہونے والے ظلم کی داستان تو پوچھے ۔۔۔ شاپنگ سینٹرز میں بچوں کو گود میں اٹھائے شاپنگ بیگ سنبھالے بیویوں کے پیچھے چلتے چلے جاتے ہیں ، آخر میں ایک رومال ملتا ہے پسینہ پوچھنے کے لیئے ۔۔۔
بائیک پہ سُکڑ سمٹ کے بچوں کی فوج کو چمگادڑ کی طرح خود سے چپکا کے بٹھاتے ہیں اور محترمہ طمطراق سے پھیل کے بیٹھی...

زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: سوموار, November 19, 2012 - 10:39
مصنف: کاشف نصیر
حکومت چاہتی ہے کہ ایسی غیر معمولی صورتحال پیدا ہوجائے کہ اسے عام انتخابات کے التوا کا جواز ہاتھ لگ جائے لیکن طے ہے کہ باوجود کوشش کہ عام انتخابات کو زیادہ عرصے تک ٹالا نہیں جاسکتا، فوج، عدلیہ، الیکشن کمیشن، میڈیا اور سب سے بڑھ کر سوشل میڈیا حکومت کو آئندہ برس انتخابات کرانے […]
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: سوموار, November 19, 2012 - 09:41

Read Online


Volume 1  Volume 2  Volume 3
...

زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: سوموار, November 19, 2012 - 00:56
مصنف: یاز غل
کیفی اعظمی نے یہ نظم تقریباً تیس سال پہلے بیروت میں اسرائیلی فوج کی جانب سے فلسطینیوں کے قتلِ عام کے موقع پر کہی تھی۔ افسوس کہ آج بھی یہی حالات ہیں۔ آج بھی غزہ کے گلی کوچے معصومین کے لہو سے رنگیں ہیں اور یہودی وحشت ہر جانب رقصاں ہے۔ اللہ تعالٰی سے دعا ہے کہ فلسطین کے مسلمانوں کو امن و سکون اور پنجۂ یہود سے نجات عطا فرمائے۔ آمین

مقتلِ فلسطیناے صبا لوٹ کے کس شہر سے تو آتی ھے
تیری ہر لہر سے بارود کی بو آتی ھے
خوں کہاں بہتا ھے انسان کا پانی کی طرح
جس سے تو روز یہاں کرکے وضو آتی ھے
دھجیاں تو نے نقابوں کی گنی تو ھوں گی
یونہی لوٹ آتی ھے یا کرکے رفو آتی ھے
...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: اتوار, November 18, 2012 - 12:54
مصنف: محمد سلیم
معاشرے میں کچھ لوگ تو بس یہی سوچ کر ہی پرے بیٹھ رہتے ہیں کہ بھلا  وہ دین کی کیا خدمت کر سکتے ہیں؟ ان کے مطابق یہ بہت ضروری ہوتا ہے کہ ان کی لمبی سی داڑھی ہو، شلوار ٹخنوں سے اوپر، قرآن شریف اگر پوارا نہیں تو کچھ تو ضرور حفظ ہو، پانچوں [...]
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: اتوار, November 18, 2012 - 11:59
مصنف: عمرانیات
...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: اتوار, November 18, 2012 - 11:32
ہاں واقعی ہم اب وہ نہیں رہے جو بحثیت مسلمان ہم کو ہونا چاہیےتھا اور رہیں بھی کیسے .. کیونکہ کہتے ہیں کہ انسان کی زندگی میں اس ماحول کا بہت بڑا اثر ہوتا ہے جس میں وہ رہ رہا ہوتا ہے.. اسی لئے اگر تمام انبیاء علیہ صلوۃ سلام کی زندگیوں کا مطالعہ کیا جائے تو کم و بیش تمام انبیاء نے بکریاں چرائیں ہیں اور بکریاں چروانے کا مقصد یہی تھا کہ انکے اندر مسکنت پیدا ہو ... یہ بھی سنا ہے کہ شیر کی صرف کھال کے اپر بیٹھنے سے انسان کے اندر تکبر پیدا ہوتا ہے. یہ بات صرف اس لئے لکھی ہے کہ ہم کو اندازہ ہو سکے کہ انسان کی زندگی میں ماحول کے کیا اثرات ہوتے ہیں...

ویسے تو یہ بات بحیثیت مسلمان ہر شخص جانتا...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: اتوار, November 18, 2012 - 10:48

ایک زمین۔۔۔دو شاعر(فراق گورکھپوری، محسن نقوی)۔۔۔دو غزلیں

رگھو پتی سہائے فراقؔ گورکھپوری کی غزل:

دیکھ محبت کا یہ عالمساز بھی کم کم، سوز بھی کم کم
یہ شیرازۂ دل کا ہے عالمیکجا یکجا، برہم برہم
حسن گلستاں شعلہ و شبنمسوزاں سوزاں، پرنم پرنم
ساکت ساکت شورش عالمدل...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: اتوار, November 18, 2012 - 08:55

میرے نانا ابو(جن کو ہم سے بچھڑے 22 برس بیت گئے ہیں) کی کتابوں کے ذخیرے  سے 1969ء کا سیارہ ڈائجسٹ ملا۔ زیادہ خوشی کی بات یہ تھی وہ "قرآن نمبر" تھا۔ میرے لئے ایک بہت ہی نایاب اور قیمتی چیز تھی۔ اس ڈائجسٹ میں سے کچھ تحاریر اپنے بلاگ پہ بھی شئیر کروں گا۔ لہٰذا اس سلسلے کی پہلی تحریر کے ساتھ حاضر ہوں۔
قرآن سے میرا تعلق:
جناب احمد ندیم قاسمی صاحب:-میں نے تعلیم کا آغاز ہی قرآن مجید سے کیا۔ چار برس کی عمر تھی جب گاؤں کی مسجد میں درس لینا شروع کیا۔ ابتدائی پانچ پارے پڑھے تھے کہ یہ سلسلہ منقطع ہو گیا۔ پرائمری تعلیم کے بعد جب مڈل میں داخلے کے لئے اپنے سر پرست چچا کے ہاں پہنچا تو...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: سنیچر, November 17, 2012 - 12:31
اس لنک پر ایک کلک آپ کو میرے نئے بلاگ پر لے جائے گا۔ بس ایک کلک !۔
ہرخبر پر نظر
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: سنیچر, November 17, 2012 - 10:41
مصنف: محمد وارث
رموزِ عشق و محبّت تمام جانتا ہوں
حسین ابنِ علی کو امام جانتا ہوں

انہی کے در کو سمجھتا ہوں محورِ مقصود
انہی کے گھر کو میں دارالسّلام جانتا ہوں

میں ان کی راہ کا ہوں ایک ذرۂ ناچیز
کہوں یہ کیسے کہ ان کا مقام جانتا ہوں

مجھے امام نے سمجھائے ہیں نکاتِ حیات
سوادِ کفر میں جینا حرام جانتا ہوں

نگاہ کیوں ہے مری ظاہری وسائل پر
جو خود کو آلِ نبی کا غلام جانتا ہوں
...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: سنیچر, November 17, 2012 - 05:31
مصنف: سعدیہ سحر




اسے ماں نے بڑی منتوں مرادوں سے مانگا تھا
میرا چاند میرا پیارا کہہ کر پکارا تھا
وہ ننھا فرشتہ سب کی آنکھوں کا تارا تھا
جس کو دیکھ کر ھزار خواب
ماں کی آنکھوں میں جاگے تھے
کرے گا سب کا نام روشن
ملک و ملت کے لیے کئ کام کرنے ھیں
ھوگا امن کا پاسباں
بنے گا سچا مسلم
ھر روز نئے...
زمرہ: اردو بلاگ

Pages

Subscribe to بلاگستان فیڈز