بلاگستان

تاریخ اشاعت: اتوار, December 23, 2018 - 15:37
"سامان سو برس کا "۔  100 کا ہندسہ زندگی کے کلینڈر میں جس موڑ پر بھی آئے  اپنے اندر  ایک عجیب سی کشش  اور خوشی رکھتا ہے جیسے ایک سنگِ میل چھو لیا ہو۔۔۔یوں کہ جیسے  بہت کچھ مکمل ہو گیا ہو۔انسانی عمر میں 100 برس اگر ناممکنات میں سے ہیں تو  ذہنی وجسمانی قوا کی مجبور ی اور لاچاری کی علامت بھی ہیں۔۔رب کی بنائی انسانی جان کی مشینری کا سو برس تک  پہنچنا محال ہے۔اس میں شک نہیں کہ   سو تو بہت دور کی بات ہےہم انسان تو اسی سے  نوے برس بھی اپنے مکمل ہوش وحواس ،جسمانی اور ذہنی  طاقت کے ساتھ زندہ نہیں رہ سکتے۔پچاس کا ہندسہ پھلانگتے ہی انسانی عمر میں...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: اتوار, December 23, 2018 - 11:20
نوجوان نے سر اٹھایا تو اس کے چہرے پر ایک فاتحانہ مسکراہٹ تھی، “تم ہمیں کبھی بھی شکست نہ دے سکو گے”۔ نوجوان کا مخاطب ایک درمیانہ قامت کا انسان تھا ، جس کے لباس سے اس کے پیشے یا معاشرتی حیثیت کی...

طفل مکتب کی تحریر کا یہ اقتباس آپ مکمل شکل میں وہیں ملاحظہ فرما سکتے ہیں۔ ...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: سنیچر, December 22, 2018 - 12:18
چار دن کی زندگی میں دو ٹوک رویے جانے والوں کے دل میں گرہ باندھ دیتے ہیں۔جنہیں کھولنے کی کوشش کریں تو اور سختی میں کس جاتے ہیں۔ مذہب و عبادت ، تعلیم و تربیت اور مشورہ و نصیحت جب اپنا اثر دکھانا بند کر دیں تو عقل کے بند دروازوں پر دستک بیجا مداخلت تصور کی جاتی ہے۔دیواروں سے سر ٹکرانے میں دروازے نہیں کھلا کرتے۔بولنے ،لکھنے اور سننے ، پڑھنے میں سُر جیسا تال میل ہوتا ہے۔ بولنے اور لکھنے والے دو طرح سے اپنے اظہار کو پیش کرتے ہیں ۔ اپنی کہہ کر خاموش رہنے والے اور دوسروں کو دیکھ کر کہنے والے۔آج کامیاب وہ کہلاتے ہیں جو کسی سے اسی کی بات کہہ دیتے ہیں۔زندگی ایک ایسی عمارت ہے جس کی آخری منزل پر کھڑے ہو...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: جمعہ, December 21, 2018 - 17:11
مصنف: ابو شامل

میں فلموں کو ادب کی ایک جدید شکل سمجھتا ہوں، گو کہ یہ ادب کی ذرا بے ادب قسم ہے لیکن آنکھوں دیکھی پر یقین بھی زیادہ آتا ہے اس لیے فلم کی اثر انگیزی بہت زیادہ ہے۔ کچھ ایسا ہی اثر مشہور ڈائریکٹر مارٹن اسکورسیز کی فلم "Silence" دیکھ کر ہوا تھا۔ یہ فلم جاپان میں عیسائیت کی تبلیغ کے لیے جانے والے چند مبلغین کی کہانی ہے۔ اس فلم کی کہانی کے کئی پہلو ہیں جیسا کہ فلم مذہب کے حوالے سے مختلف انسانوں کے مختلف رویّوں کو اچھی طرح عکاسی کرتی ہے۔ بہرحال، سخت اداسی طاری کر دینے والی فلم ہے لیکن اس کو دیکھتے ہی ذہن میں ایک خیال کوندا، ایک منظر اُبھرا، زمان و مکان تبدیل ہوئے اور پہنچ گیا سولہویں صدی کے...

زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: جمعہ, December 21, 2018 - 16:47
مصنف: کچھ دل سے

«« آج کی بات »»
ہر بات کہہ دینے کی نہیں ہوتی، کچھ سننے کی بھی ہوتی ہیں ،کچھ سمجھنے کی ، کچھ جذب کر لینے کی اور کچھ سہہ جانے کی .....!!!!...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: جمعہ, December 21, 2018 - 09:38
مصنف: محمد وارث
ہر کجا ویراں بوَد آنجا اُمیدِ گنج ہستگنجِ حق را می نجوئی در دلِ ویراں چرا؟
جہاں کہیں بھی ویرانہ ہو وہاں سے خزانہ ملنے کی امید ہوتی ہے، تو پھر تُو ویران اور ٹوٹے ہوئے دلوں میں حق کے خزانے کی تلاش کیوں نہیں کرتا؟
----------

تو گُل و من خار کہ پیوستہ ایم
بے گُل و بے خار نباشد چمن

تُو پھول ہے اور میں کانٹا ہوں کہ دونوں باہم پیوستہ ہیں، پھول اور کانٹوں کے بغیر چمن نہیں ہوتا (دونوں باہم موجود ہوں تو چمن کا بھی وجود ہوتا ہے)۔----------
دل و جاں شہیدِ عشقت، بہ درونِ گورِ قالبسوئے گورِ ایں شہیداں، بگذر زیارتے کن
(میرے) جسم کی قبر میں دل اور جان تیرے عشق...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: جمعہ, December 21, 2018 - 00:34
مصنف: شعیب صفدر

ابے آج کل کیا کر رہا ہے
"کچھ نہیں بس فارغ ہو وقت برباد کر رہا ہوں"
اچھا! ایسا کر پھر یو ٹیوب پر ڈاکومینٹر...

زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: جمعرات, December 20, 2018 - 15:16
غزل 
تو اور ترے ارادے
چل چھوڑ مسکرا دے

دل کون دیکھتا ہے
پھولوں سے گھر سجا دے

میں خود کو ڈھونڈتا ہوں
مجھ سے مجھے چھپا دے

سُن اے فریبِ منزل
رستہ نیا سُجھا دے

سوچوں نہ  پھر وفا کا
ایسی کڑی سزا دے

مرتا ہوں پیاس سے میں
تو زہر ہی پلا دے

منظر یہ ہو گیا بس
پردے کو اب گر ادے

نامہ فراق کا ہے
لا! وصل کا پتہ دے

پھر مائلِ یقیں ہوں
پھر سے مجھے دغا دے

احمدؔ غزل کہی ہے
جا بزم میں سنا دے
محمد احمدؔ

...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: جمعرات, December 20, 2018 - 12:43

خودی کی موت سے مغرب کا اندرون بے نور
خودی کی موت سے مشرق ہے مبتلائے جذّام
خودی کی موت سے روح عرب ہے بے تب و تاب
بدن عراق و عجم کا ہے بے عرق و عظّام
خودی کی موت سے ہندی شکستہ بالوں پر
قفس ہوا ہے حلال اور آشیانہ حرام
خودی کی موت سے پیر حرم ہوا مجبور
کہ بیچ کھائے مسلمانون کا جامہء احرام

جس بندہء حق بیں کی خودی ہو گئ بیدار
شمشیر کی مانند ہے برّندہ و برّاق
اس کی نگہ شوق پہ ہوتی ہے نمودار
ہر ذرّے میں پوشیدہ ہے جو قوّت اشراق
اس مرد خدا سے کوئی نسبت نہیں تجھ کو
تو بندہء آفاق ہے ۔ وہ صاحب آفاق
تجھ میں ابھی پیدا...

زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: بدھ, December 19, 2018 - 15:51
مصنف: کچھ دل سے

~√~ أج کی بات ~√~
اِیمان داری چار عادتوں کا پیکج ہے ۔1 - وعدے کی...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: منگل, December 18, 2018 - 22:58

سنانے کو ایک سادہ نظم چاہتا ہوںتنہائی میں ایک رویدِ بزم چاہتا ہوں
مقرر مقرر کا نہیں میں نقشِ بیمارسینوں پر لکھتا تراشا قلم چاہتا ہوں
زمینِ کاغذ پہ نہیں بچھاتا ردا کے پھولبادِ معطر کو اطہرِ انعم چاہتا ہوں


خندہ جبین / محمودالحق
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: سوموار, December 17, 2018 - 20:13
مصنف: محمد اویس

جو بھی نیا کام کرنا ہے،یا خود میں کوئی تبدیلی لانی ہے تواسے ابھی سے ہی شروع کیجئے،کیونکہ اگر
مناسب وقت کا انتظار کرنا ہے،تو وہ کبھی نہ آنے والا ہے۔
کیونکہ ہر دفعہ کچھ وجوہا ت ایسے سامنے آجائیں گے،جب آپ سمجھیں گے کہ جب یہ ختم ہو جائیں،تو پھر شروع کروں گا۔اوریقین مانئے آپ کبھی بھی وہ کام شروع نہ کر سکیں گے۔۔
سو جو بھی کرنا ہے۔۔۔۔ابھی کر۔۔۔۔۔۔

...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: سنیچر, December 15, 2018 - 14:51
غزل

سڑکوں پہ گھومنے کو نکلتے ہیں شام سے
آسیب اپنے کام سے، ہم اپنے کام سے

نشّے میں ڈگمگا کے نہ چل، سیٹیاں بجا
شاید کوئی چراغ اُتر آئے بام سے

غصّے میں دوڑتے ہیں ٹرک بھی لدے ہوئے
میں بھی بھرا ہُوا ہوں بہت انتقام سے

دشمن ہے ایک شخص بہت، ایک شخص کا
ہاں عشق ایک نام کو ہے ایک نام سے

میرے تمام عکس مرے کرّ و فر کے ساتھ
میں نے بھی سب کو دفن کیا دھوم دھام سے

مجھ بے عمل سے ربط بڑھانے کو آئے ہو
یہ بات ہے اگر، تو گئے تم بھی کام سے

ڈر تو یہ ہے ہوئی جو کبھی دن کی روشنی
اُس روشنی میں تم بھی لگو گے...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: سنیچر, December 15, 2018 - 10:05

ایک خاتون کی عادت تھی کہ وہ روزانہ رات کو سونے سے پہلے اپنی دن بھر کی خوشیوں کو ایک کاغذ پر لکھ لیا کرتی تھی

ایک شب اس نے لکھا کہ
میں خوش ہوں کہ میرا شوہر تمام رات زور دار خراٹے لیتا ہےکیونکہ وہ زندہ ہے اور میرے پاس ہے
یہ اللّٰه کا شکر ہے
میں خوش ہوں کہ میرا بیٹا صبح سویرے اس بات پر جھگڑا کرتا ہے کہ رات بھر مچھر،کھٹمل سونے نہیں دیتے یعنی وہ رات گھر پہ ہی گزارتا ہے آوارہ گردی نہیں کرتا
اس پر بھی اللّٰه کا شکر ہے۔
میں خوش ہوں کہ ہر مہینہ بجلی، گیس، پانی،پٹرول وغیرہ کا اچھا خاصا ٹیکس ادا کرنا پڑتا ہے یعنی یہ سب چیزیں میرے پاس میرے استعمال میں ہیں اگر یہ نہ...

زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: بدھ, December 12, 2018 - 17:46
مصنف: کچھ دل سے
↩ آج کی بات ↪
انسان تین حالتوں میں سچائی کی انتہا پر ہوتا ہے ،◀ شدید غصے میں◀ شدید دکھ میں اور◀ انتہائی خوشی کے وقت
تعجب کی بات ہے ان تین حالتوں ہی میں انسان زندگی کی اصل لذت سے لطف اندوز ہوسکتا ہے...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: منگل, December 11, 2018 - 12:32
مصنف: کچھ دل سے
No automatic alt text available.صاف دل؛ ایک عظیم نعمت اور ضرورت - خطبہ جمعہ مسجد نبوی (اقتباس)29 ربیع الاول1440 بمطابق 07 دسمبر 2018امام و خطیب:  ڈاکٹر جسٹس حسین بن عبد العزیز آل شیخترجمہ: شفقت الرحمٰن مغلبشکریہ: دلیل ویب
فضیلۃ الشیخ ڈاکٹر جسٹس حسین بن عبد العزیز آل شیخ حفظہ اللہ نے 29...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: منگل, December 11, 2018 - 12:07
فلاحی ریاست اپنے شہریوں کو ہاتھ پھیلانے سے باز رکھنے کے لئے بلا امتیاز مدد فراہم کرتی ہے۔ بچوں کی تعلیم اور صحت کا خصوصی بندوبست کرتی ہےتو بوڑھوں کے علاج معالجہ و خوراک کا خیال رکھتی ہے۔قابل اور ذہین نوجوان سفارش کی سیڑھی کے بغیر بلندیاں چھونے کے قابل بنائے جاتے ہیں۔رٹے لگانے سے رٹے رٹائے نتائج حاصل نہیں کئے جاتے بلکہ خودانحصاری کی تعلیم دی جاتی ہے۔ خودکفالت کے سبق میں عزت و احترام آدمیت کا مقام پیدا کیا جاتا ہے۔کھیل کے میدان آباد رکھے جاتے ہیں۔آگے بڑھنے کے لئے تنگ گلیوں سے گزرا جاتا ہے۔راستہ دینے پر شکریہ ادا کیا جاتا ہے۔پیدل چلنے والوں کو روندا نہیں جاتا۔پاؤں سے چلنے والے پاؤں سے تیز رفتاری...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: منگل, December 11, 2018 - 03:03
عدلیہ کا کردار بہت کلیدی ہوتا ہے۔ یہ ایسا ادارے ہے جو عدل کی فراہمی کا ضامن  ہے۔ اور عدل کرنے والے عادل کہلاتے ہیں۔ جن کو منصف یا جج بھی کہا جاتا ہے۔ مختلف زبانوں میں۔  اگر ہم دیکھیں تو یہ ایسا محکمہ یا ادارہ ہے جس کے ساتھ زندگی کے ہرشعبے  کا تعلق  ہوتا ہے تفصیل میں جانے سے پہلے ایک نظر انصاف پر ڈالی جاوے تو عین مناسب ہوگا۔ انصاف کی تعریف تو کوئی وکیل یا جج صاحب ہی بہتر طور پر کرسکتے ہیں۔ لیکن میں بطور لے مین یہ کہہ سکتا ہوں کہ انصاف کا متضاد بے انصافی ہے۔   گویا بے انصافی کو ختم کرنے کےلے انصاف کی ضرورت ہے۔ جیسے اندھیرے کا متضاد روشنی ہے۔ اور روشنی سے ہی...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: سوموار, December 10, 2018 - 17:21
مصنف: کچھ دل سے

سفید کپڑے پر انار کے دانے کے چند چھینٹے گر جائیں تو ساری عمر دھو دھو کر بھی وہ کپڑا واپس پہلے سا سفید نہیں ہوتا۔ یہ سفید کپڑا آپ کا کردار ہے۔ اسے سنبھال سنبھال رکھیے۔
 از...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: سوموار, December 10, 2018 - 11:04

پختہ افکار کہاں ڈھونڈنے جائے کوئی
اس زمانے کی ہوا رکھتی ہے ہر چیز کو خام
مدرسہ عقل کو آزاد تو کرتا ہے مگر
چھوڑ جاتا ہے خیالات کو بے ربط و نظام
مردہ ۔ لادینی افکار سے افرنگ میں عشق
عقل بے ربطیء افکار سے مشرق میں غلام

کلام ۔ علامہ محمد اقبال

زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: اتوار, December 9, 2018 - 18:44
مصنف: عامر منیر
مجھے علامہ اقبال کو ٹھیٹھ اکیڈمک معنوں میں فلاسفر ثابت کرنے میں کوئی دلچسپی نہیں، بلکہ وہ خود بھی اپنی شاعری میں فلسفے پر جیسی تنقید کرتے ہیں، اس کے پیش نظر مجھے یقین ہے کہ خود کو فلسفی کہلانا ہرگز نہ پسند کرتے۔ وہ ایک مفکر اور مصلح تھے، بدلتے ہوئے زمانے کی الجھنوں اور سوالات سے نبردآزما ایک عبقری تھے۔
مکمل تحریر کے لئے یہاں کلک کریں »
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: سنیچر, December 8, 2018 - 06:46

ٹوائلاٹ زون ٹی وی سیریل کی ایک قسط ‘کک دا کین‘ دیکھ کر بڑھاپے کی اصل کا خیال آیا. اس قسط میں ایک سن رسیدہ شخص جو اولڈ ہوم میں اپنے پرانے دوستوں کے ساتھ رہتا ہے اس نتیجے پر پہنچتا ہے کہ ان کے بوڑھے ہونے کی وجہ یہ ہے کہ انہوں نے بچوں جیسے کھیل چھوڑ دیے ہیں اور اپنا بچپنا کھو دیا ہے۔

میری دانست میں بوڑھا ہونے کا مطلب یہ ہے کہ دنیا اجنبی ہوتی جائے، جن حقیقتوں کے ساتھ آپ پلے بڑے ہوں، وہ تبدیل ہوتی...

زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: بدھ, December 5, 2018 - 18:39
مصنف: عامر منیر
اورنگزیب کے ہاتھوں سرمد کے قتل کا واقعہ جس طرح بیان کیا جاتا ہے، اس سے تاثر ملتا ہے کہ وہ وحدت ادیان کے قائل اور صوفیاء کے اس نوفلاطونی مکتب فکر سے تعلق رکھتے تھے جو نیک و بد کے روایتی مذہبی تصور کو درخور اعتناء نہیں سمجھتا۔ لیکن امشب رباعیات سرمد کی ورق گردانی سے یہ خوشگوار حیرت ہوئی کہ اپنی رباعیات میں سرمد ٹھیٹھ اسلامی روایت کے پیرو ایک صوفی ملتے ہیں جو زاہد پر اس کی ریاکاری اور منافقت کے سبب تنقید ضرور کرتے ہیں، لیکن ان کی یہ تنقید کہیں بھی دینی روایات و شعائر کے تمسخر میں نہیں ڈھلتی۔
مکمل تحریر کے لئے یہاں کلک کریں »...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: بدھ, December 5, 2018 - 11:55
سوشل میدیا اسٹیٹس یا دُکھوں کے اشتہاراز : محمد احمدؔ
پہلے دنیا میں عمومی طور پر دو طرح کے لوگ ہوتے تھے۔ یعنی لوگ دوطرح کے رویّے رکھتے تھے۔ کچھ لوگ ایکسٹروورٹ (باہر کی دُنیا میں جینے والے) ہوتے تھے اور چاہتے تھے کہ جو کچھ اُن پر بیت رہی ہے وہ گا گا کر سب کو بتا دیں ۔ وہ ایک ایک کو پکڑتے اور اپنا غم خوشی اُس کے گوش و گزار کر دیتے اور اس طرح اُنہیں صبر آ جاتا تھا۔

دوسری قسم کے لوگ وہ ہوتے جو انٹروورٹ (اپنے دل کی دنیا میں بسنے والے) ہوتے اور جو اپنے دل کی بات اپنے دل میں ہی رکھتے تھے ۔ کسی کو نہ بتاتے کہ اُن پر کیا بیت رہی ہے یا وہ کیا سوچ رہے ہیں۔ دوست احباب اُن کی اُداسی کا...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: بدھ, December 5, 2018 - 10:43

سورة 2 البَقَرَة آیت 42 ۔ وَلَا تَلۡبِسُوا الۡحَـقَّ بِالۡبَاطِلِ وَتَكۡتُمُوا الۡحَـقَّ وَاَنۡتُمۡ تَعۡلَمُوۡنَ

باطل کا رنگ چڑھا کر حق کو مشتبہ نہ بناؤ اور نہ جانتے بوجھتے حق کو چھپانے کی کوشش کرو

سورة 5 المَائدة آیت 8 ۔ ييٰۤـاَيُّهَا الَّذِيۡنَ اٰمَنُوۡا كُوۡنُوۡا قَوَّا امِيۡنَ لِلّٰهِ شُهَدَآءَ بِالۡقِسۡطِ‌ وَلَا يَجۡرِمَنَّكُمۡ شَنَاٰنُ قَوۡمٍ عَلٰٓى اَ لَّا تَعۡدِلُوۡا‌ ؕ اِعۡدِلُوۡا هُوَ اَقۡرَبُ لِلتَّقۡوٰى‌ وَاتَّقُوا اللّٰهَ‌ ط اِنَّ اللّٰهَ خَبِيۡرٌۢ بِمَا تَعۡمَلُوۡنَ‏

اے لوگو جو ایمان لائے ہو ۔ اللہ کی خاطر راستی پر قائم رہنے والے اور انصاف کی گواہی...

زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: منگل, December 4, 2018 - 15:51
مصنف: کچھ دل سے
⇉ آج کی بات ⇇
کبھی کسی کے اچھے مقدر کو حسرت سے تکتے ہوئے اپنی تقدیر بننے کی دعا نہ کرنا ورنہ اُس کے مقدر کے سارے کانٹے بھی اپنی پلکوں سے چننے پڑ جائیں گے....
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: منگل, December 4, 2018 - 12:23
مصنف: کچھ دل سے
 sky and outdoor
اسلام میں مسلمان کے سماجی حقوقخطبہ جمعہ مسجد نبوی ( اقتباس)22 ربیع الاول 1440 بمطابق 30 نومبر 2018امام و خطیب:  ڈاکٹر عبد الباری بن عواض ثبیتیترجمہ: شفقت الرحمٰن مغلبشکریہ: اردو مجلس فورم
فضیلۃ الشیخ ڈاکٹر عبد الباری بن عواض ثبیتی حفظہ اللہ نے مسجد نبوی میں 22 ربیع...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: اتوار, December 2, 2018 - 17:38

میرا سوچنے سمجھنے کا انداز بچپن سے ہی بہت سائینٹفیک رھا ہے۔مشاہدات کی روشنی میں پہلے ایک مفروضہ تیارکرنا اور پھر اس مفروضے کی تائید یا مخالفت میں شواہد ڈھونڈنا اور پھر نتیجہ اخذ کرنا۔ اس سائنٹفک اپروچ سے اخذ شدہ نتائج حتمی اور دیر پا ہوتے ہیںیہ میرے بچپن کے بہت ابتدائی دنوں کی بات ہے جب ہم لوگ جہلم سے گرمیوں کے چھٹیاں گزارنے کمالیہ آیا کرتے تھے۔ ایک بار اپنے سلیپر کمالیہ بھول گیا۔ اگلے سال  چھٹیاں گزارنے آئے تو سلیپر سائز میں بہت چھوٹے رہ گئے تھے جس سے میں نے مفروضہ بنایا کہ جوتے وقت کے ساتھ چھوٹے ہوتے جاتے ہیں اور چھوٹے ہوتے ہوتے وہ غائب ہوجاتے ہیں اور اس مفروضے کو تقویت اس بات سے...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: سنیچر, December 1, 2018 - 12:39
مصنف: کچھ دل سے


ヅ انگوٹھا کہانی ヅمنقول
 ‏تعلیم انسان کو انگوٹھے کے نشان سے دستخط تک لے گئی،اورٹیکنالوجی دستخط سے انگوٹھے پر واپس لے آئی۔

دنیا گول ہے ヅ ヅ ヅ...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: سنیچر, December 1, 2018 - 11:45
مصنف: کچھ دل سے
⟲ آج کی بات ⟳
ہم وہ قوم ہیں جسے اللہ تعالی نے اسلام کے ذریعے عزت عطا فرمائی ہے، اسے چھوڑ کر ہم جس چیز میں بھی عزت تلاش کریں گے اللہ ہمیں رسوا ہی کرے گا...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: جمعہ, November 30, 2018 - 17:38

اردو ادب سے دلچسپی رکھنے والوں کے لئے چراغ حسن حسرت کا نام کسی تعارف کا محتاج نہیں ہے۔ حسرت طرح دار شاعر و ادیب تھے، آپ کا بنیادی شعبہ صحافت تھا اور مزاح نگاری میں بھی کمال انداز رکھتے تھے۔

ایک بار حسرت سے مشاعرے میں ماہیا سنانے کی فرمائش کی گئی تو انہوں نے یہ ماہیا سُنایا۔

باغوں میں پڑے جھولے
تم بھول گئے ہم کو
ہم تم کو نہیں بھولے

بقول راوی مشاعرے میں داد و تحسین سے چھت کا اُڑ جانا کیا ہوتا ہے وہ ہم نے آج دیکھا۔

ہم نے چراغ حسن حسرت کی  دو خوبصورت غزلیں آپ کے لئے منتخب کی ہیں ملاحظہ فرمائیے:


یارب غم ہجراں میں...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: جمعہ, November 30, 2018 - 13:24
مصنف: کچھ دل سے
Image result for person giving you advice isn t perfect
ہم میں سے اکثریت یہ سوچ کر کسی کی اچھی نصیحت رد کر دیتی ہے " مجھے سمجھانے سے پہلے خود عمل کرو " 
یہ ضروری نہیں جو شخص آپکی اصلاح کر رہا ہو ، آپکو سیدھے راستے کی طرف نشاندہی کر رہا ہو ، آپ میں موجود کسی خامی کو دور کرنے کا کہہ رہا ہو وہ شخص خود اپنی ذات میں مکمل ہو ، عیب سے پاک ہو ، سیدھے راستے پر ہو ، ہو سکتا ہے وہ شخص بیسیوں خامیوں کا...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: جمعہ, November 30, 2018 - 06:07

تسلیم کی خوگر ہے جو چیز ہے دنیا میں
انسان کی ہر قوّت سرگرم تقاضہ ہے
اس ذرّے کو رہتی ہے وسعت کی ہوس ہر دم
یہ ذرّہ نہیں ۔ شاید سمٹا ہوا صحرا ہے
چاہے تو بدل ڈالے ہیئت چمنستاں کی
یہ ہستی دانا ہے ۔ بینا ہے ۔ توانا ہے

گلستاں میں نہیں حد سے گذرنا اچھا
ناز بھی کر تو باندازہء رعنائی کر
پہلے خود دار تو مانند سکندر ہو لے
پھر جہاں میں ہوس شوکت دلدائی کر

نظر آتے نہیں بے پردہ حقائق ان کو
آنکھ جن کی ہوئی محکومی و تقلید سے کور

ملے گا منزل مقصود کا اسی کو سراغ
اندھیری شب میں ہے چیتے کی آنکھ جس کا چراغ
میّسر آتی ہے...

زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: جمعرات, November 29, 2018 - 04:52
 پچھلی تحریر  میں  Math Magic Square  کے بارے میں اعداد کی ترتیب اور ان سے بنائے گئے Graphs کو میں نے تصویری شکل میں پیش کیا ، اب ہم اس  Math magic  کی بنیادی جزئیات سے حاصل کئے گئے نتائج پر روشنی ڈالیں گے۔آئیے سب سے پہلے ہم  Math magic   کی ترتیب اور اس کی تشکیل میں اختیار کئے گئے فارمولہ پر روشنی ڈالتے ہیں۔
...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: بدھ, November 28, 2018 - 21:57
یہ رات ایک ایسے تھکے ہوئے دن کو جنم دے گی جس میں ایک بار پھر واہموں کی مجسم تشکیل کا انتظار سوچوں پر حاوی رہے گا Source

طفل مکتب کی تحریر کا یہ اقتباس آپ مکمل شکل میں وہیں ملاحظہ فرما سکتے ہیں۔ ...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: بدھ, November 28, 2018 - 18:37
مصنف: عامر منیر
شخصی تعلقات کا قیام، استحکام اور دوام انسان کی فطری خواہشات میں سے ایک ہے۔جو دل میں سمائیں، ان کا نظر کے سامنے، حواس کی رسائی اور دل سے رابطے میں رہنا سانسوں کے تسلسل کی مانند ضروری او ر ناگزیر معلوم ہوتا ہے۔ سماجی کثافتوں اور شخصی اختلافات کی گھٹن، فاصلوں کی تیغ اور حوادث زمانہ کے ناوک اس خواہش کو بار بار فنا کے گھاٹ اتارتے ہیں لیکن یہ خواہش مر مر کر زندہ ہوتی ہے، ڈوب ڈوب کر ابھرتی ہے۔ اپنی ہی آگ میں بھسم ہو کر دوبارہ جنم لینے والے اساطیری پرندے کی مانند شکست، جدائی اور نا امیدی کی راکھ سے نئے افراد، نئے خوابوں اور نئی امیدوں کا جسد لئے پھر اڑان بھرتی ہے، ممکنات کے افق پر پھر سے کوئی آشیانہ...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: بدھ, November 28, 2018 - 16:29
مصنف: کوثر بیگ
انجان موت

تبصرے کے لئے پیش ہے ایک مختصر تحریر
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: بدھ, November 28, 2018 - 16:28
مصنف: کوثر بیگ
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: بدھ, November 28, 2018 - 16:15
مصنف: کوثر بیگ


  کیا ہوا تم یوں دوڑتی کیوں آئی ہو اور اتنی گھبرائی ہوئی کیوں ہو ؟ ارے اس کی طبعیت تو بگڑنے لگی ہے آنکھیں خوف سے پھٹی ہیں ۔آواز حلق میں پھنسی ہے ۔چہرے کا رنگ اڑا ہواہے یہ خوف سے کیوں کانپ رہی ہے ؟ذرا کوئی آئے ۔ دیکھے تو ! میری بیٹی کو پانی پلائے ۔ 
بیٹی یہ لو پانی پی لو تم اب اپنے گھرپر ہو ۔ محفوظ ہو ۔ اب  بتاؤ بھی ہوا کیا ہے ؟ وہ بیٹی کی بیٹھ سہلاتے پوچھنے لگی ۔امی ی ۔۔ سڑک پر ۔۔ ایک آدمی ۔۔ کو ۔۔ گولی ۔۔۔ مار کر ۔۔۔ گاڑی سے ۔۔۔۔کچل دیا ۔۔۔گیا ہے ۔۔  میری آنکھوں کے سامنے۔۔۔۔ وہ ہکلا ہکلا کر آہستہ سے بولنے لگی ۔۔شیششش خاموشماں منہ پر انگلی...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: بدھ, November 28, 2018 - 14:49
مصنف: کچھ دل سے
Related imageکیا فرق پڑتا ہے۔۔۔تحریر: لبنیٰ سعدیہ عتیق
ــــــــــــــــ
شاید پہلے بھی لکھا ہو۔۔ پھر لکھ دیتی ہوں۔۔۔
بازار میں پیاس لگے، کوئی جوس خریدا، پیا اور خالی ڈبہ بیگ میں رکھ لیا، اسٹرا اور اسٹرا پہ چڑھی پتلی سی پنؔی سمیت۔۔۔۔
گھر لاکر کوڑے دان میں ڈال دیا۔
چاروں طرف کوڑا بکھرا ہوا ہے ایک ڈبے سے کیا ہوگا۔۔۔۔۔۔ مگر نہیں
ـــــــــــــــــــ
گھر میں سودا آتا ہے، چائے کی پتؔی، گلوکوز، شیمپو، مچھر بھگائو کوائل، دوا اور اسی طرح کی مختلف...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: منگل, November 27, 2018 - 16:38
مصنف: کچھ دل سے
 ⇚ آج کی بات ⇛
اللہ تعالیٰ نے دنیا میں جسے عزت دی ہے اس کی عزت کرنا لازم ہے لیکن جسے ذلیل کیا اسے ذلیل کرنا ضروری نہیں۔...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: منگل, November 27, 2018 - 12:41
مصنف: کچھ دل سے
Image result for ‫راز زندگی‬‎
〜》 رازِ زندگی《〜اقتباس از محمود الحق
جب دعویٰ عمل سے بڑا ہو تو دراز قد والا بھی چھوٹا دکھائی دیتا ہے۔ زندگی کو جاننے والے راز زندگی پا جاتے ہیں۔ پھر جینا انہیں اتنا مشکل ہو جاتا ہے کہ انسانوں پر عدم اعتماد کی وجہ سے فطرت سے دل لگا لیتے ہیں۔ کیونکہ انسان کا  چلن کسی فارمولہ کا محتاج نہیں۔ وہ اپنے لئے دودھ شہد کی نہر خود کھودتا ہے۔ دینا نہ بھی چاہے ...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: سوموار, November 26, 2018 - 13:40
مصنف: کچھ دل سے
Related image
سہولت کارمنقول
برائی کو پھیلانے والے کتنے ہیں؟بہت ہی کم۔ شاید ایک فیصد بھی نہیں۔اور برائی کے خلاف جہاد کرنے والے زیادہ ہیں، شاید 2 فیصد یا 5 فیصد۔لیکن پھر بھی برائی پھیل رہی ہے۔آخر کیوں ؟کیونکہ زیادہ تر لوگ یعنی 98 فیصد یا 95 فیصد لوگ نیوٹرل رہنا پسند کرتے ہیں۔اور یہی نیوٹرل رہنے والے برائی پھیلانے والوں کے سہولت کار ہیں۔...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: سوموار, November 26, 2018 - 08:06
چین کے بادشاہ نے   2300  قبل مسیح دریا سے باہر نکلتے کچھوے کی پشت پر مختلف ڈاٹ کی ایسی ترکیب   دیکھی جو اپنی نوعیت میں بہت خاص تھی۔ چاروں اطراف سے ان ڈاٹس کی تعداد 15 تھی۔ جسے لو شو میتھ میجک کا نام دیا گیا۔...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: سوموار, November 26, 2018 - 05:09

جس آگ سے بچنے میں بڑے بزرگ بچوں کو  محفوظ رکھتے ہیں ۔ وہی بچہ بڑا ہو کر فکر و ایمان کی بھٹی سے کندن بن جاتا ہے یا پھر گناہوں کی لت کا شکار ہو کر انگاروں سے کھیلنے لگتا ہے۔ بلندیاں چھونے پر نیچے دیکھ کر چلنا  اس کے لئےمحال ہو جاتا ہے۔ پتھر کنکر اور شیشے کی کرچیوں سے پاؤں بچائے جاتے ہیں۔ لیکن کبھی  چیونٹیوں کے سر کچلنے کے احساس کا پاس سے گزر بھی نہیں ہوتا۔ چند دہائیوں کی ایک زندگی کو فلمایا جائے تو تین گھنٹے میں ختم ہو جاتی ہے۔ہر انسان اپنی نیت کا پھل پا لیتا ہے چاہے اچھا یا برا۔ سولہویں صدی نے انسان کو مشین سے روشناس کرایا۔ جو بڑھتے بڑھتے زندگی کے لئے لازم ہو گیا۔...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: اتوار, November 25, 2018 - 15:31
مصنف: کچھ دل سے
↬آج کی بات ↫
اپنی زندگی میں اُصولوں کی حدود قائم کیجئے۔ ان حدود کا یہ مقصد نہیں کہ لوگوں کو دور رکھے، بلکہ یہ تو خود کو محفوظ رکھنے کا ایک سمجھ دارانہ فعل ہے۔...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: اتوار, November 25, 2018 - 12:16
مصنف: کچھ دل سے
Related image
خیر خواہی۔۔۔ دین کا بنیادی حصہخطبہ جمعہ مسجد نبوی (اقتباس) 15 ربیع الاول 1440 بمطابق 23 نومبر 2018امام و خطیب: پروفیسر ڈاکٹر علی بن عبد الرحمن الحذیفیترجمہ: شفقت الرحمٰن مغلبشکریہ: اردو مجلس فورم
فضیلۃ الشیخ پروفیسر ڈاکٹر علی بن عبد الرحمن الحذیفی حفظہ اللہ نے 15 ربیع الاول 1440 کا خطبہ جمعہ مسجد نبوی میں بعنوان "خیر خواہی۔۔۔ دین کا بنیادی حصہ" ارشاد فرمایا جس انہوں نے کہا کہ قرآن کریم پر...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: اتوار, November 25, 2018 - 09:27

زندگی کے میدانِ کارزار میں حقیقی مؤثر ہتھیار اور فتحِ کا مجرب نسخہ ہے

اللہ پر یقین ۔ خُود اعتمادی ۔ جہدِ مسلسل ۔ صبر و تحمل ۔ انصاف ۔ محبت و احترام

زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: جمعرات, November 22, 2018 - 12:08
مصنف: کچھ دل سے
...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: بدھ, November 21, 2018 - 16:36
مصنف: کچھ دل سے

~✓~ آج کی بات ~✓~
حقیقی رشتوں میں سمجھوتہ اجنبی رابطوں کی الجھنوں سے بہتر ہے۔
ڈاکٹر رابعہ خرم درانی
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: بدھ, November 21, 2018 - 11:04
مصنف: محمد اویس
لوگ کیا کہیں گے؟؟؟ایک جملہ جو ہر دفعہ کچھ نیا کرتے ہوئے ہمارے حواس پر چھا جاتا ہے،"لوگ کیا کہیں گے"اور پھر یہ ڈر جو کہ محض خیالی ہی ہوتا ہے،جس کا سرے سے کوئی وجود ہی نہیں ہوتا ہمیں کچھ "بھی" کرنے سے روک لیتا ہے۔۔۔۔یہ بات تومسلمہ ہے کہ
ہم چاہےجتنا بھی اچھا کام کرے،کسی نہ کسی کو تو وہ نا پسند ہو گاسو تو پھر ہم وہ کام کرتے ہی کیوں نہیں جو ٹھیک ہو ،ہمیں پسند بھی ہو مطلب ""نیک ہے نیت اگر تیری تو کیا پرواہ تجھے ""؟؟دراصل ہوتا یہ ہے کہ ہم میں سے اکثر دوسروں کی طرف انگلی اٹھانے میں ایکسپرٹ ہوتے ہیں ،لیکن خود اپنی طرف یا اگر کوئی دوسر ا ان کی طرف ...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: بدھ, November 21, 2018 - 06:44
Celebrating Eid Middle Dr. Muhammad Asadullah           My younger   son Anas   tries to celebrate his birthday twice or thrice in every year. Isn’t it surprising? Actually he was born on the day which was of Eid.Now he insist to remember the day of Eid and forget the date  because in this process he has an advantage of celebrating his birthday on both the the Eids,Eid- ul- fitr ...
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: منگل, November 20, 2018 - 17:43
مصنف: کچھ دل سے

❀ آج کی بات ❀
زبان کی حفاظت دولت کی حفاظت سے زیاده مشکل ہے.
زمرہ: اردو بلاگ
تاریخ اشاعت: منگل, November 20, 2018 - 16:33
مصنف: کچھ دل سے
Image result for soilمٹی (مکالمہ)از عمر الیاس
زندہ ہونے کا پتہ دیتی ہے نرمی ورنہبعد مرنے کے تو سب جسم اکڑجاتے ہیں
فیاض فاروقی

انسان کی سمجھ نہیں آتی۔ ایک طرف اِتنا شعور ، اور دوسری طرف اتنی جہالت۔
کیا ہو گیا! یہ مشاہدے ، یہ طرزِ تخاطب۔ کُچھ شکوہ شکوہ سا لگ رہا ہے۔
میں دراصل ایک ریسرچ کے نتائج دیکھ رہا تھا۔ میری ماسٹرز...
زمرہ: اردو بلاگ

Pages

Subscribe to بلاگستان فیڈز